ہفتہ, دسمبر 3, 2022
ہفتہ, دسمبر 3, 2022

HomeFact Checkسوشل میڈیا پر شیعہ عالم دین مولانا کلب صادق کے انتقال کی...

سوشل میڈیا پر شیعہ عالم دین مولانا کلب صادق کے انتقال کی فرضی خبر شیئر کی جارہی ہے

مولانا سید کلب صادق نقوی صاحب اپنے رب کے بارگاہ میں کوچ فرما گئے۔اِنّا لِلّهِ وَاِنّا اِلَيْهِ رَاجِعُوْن

کیا ہے مولاناکلب صادق کے موت کی خبر وائرل پوسٹ؟

سوشل میڈیا پر ان دنوں مسلم پرسنل لا بورڈ کے نائب صدر اور شیعہ عالم دین مولاناکلب صادق کے حوالے سے دعویٰ کیاجارہاہے کہ شدید علالت کے بعد انتقال فرماگئے ہیں۔واضح رہے کہ مولانا کے انتقال کے دعوے 18 اکتوبر کو کئے ہیں۔درج ذیل میں وائرل پوسٹ کے آرکائیو موجود ہیں۔

طیب مجالس کے فیس بک پوسٹ کاآرکائیو لنک۔

سیراج گوہر کےپوسٹ کا آرکائیو لنک۔

صابر علی صدیقی کے پوسٹ کاآرکائیو لنک۔

حیدکرارچینل کا آرکائیو لنک۔

غیورعباس کے ٹویٹر پوسٹ کا آرکائیو لنک۔

Fact check / Verification

سوشل میڈیا پر مولاناکلب صادق کے موت کی خبر میں کتنی سچائی ہے یہ جاننے کےلئے ہم نے کچھ گوگل کیورڈ سرچ کیا۔اس دوران ہمیں ڈیلی آگ نیوز ویب سائٹ پر 18نومبر 2020 کی ایک خبر ملی۔جس کے مطابق مولانا کلب صادق کی حالت سنگین ہے۔

مزید کیورڈ سرچ کرنے پر ہمیں قومی آواز کے ویب سائٹ پر 19نومبر2020 کی ایک خبر ملی۔جس کے مطابق کلب صادق کے انتقال کی خبر جھوٹی ہے۔البتہ وہ شدیدعلالت کی وجہ سے  لکھنو کے ایرا میڈیکل کالج میں زیرعلاج ہیں۔

پی این ایس نیوز کے فیس بک پر ہمیں مولانا کے فرزند کلب سبطین نوری  کا ایک ویڈیو ملا۔جس میں وہ اپنے والد کے حوالے موت کی خبر کو خارج کیا ہے۔

https://www.facebook.com/pns.khabar/videos/2849299085309411

ان سبھی تحقیقات کے باوجود ہم نے سوچا کیوں نہ مولانا کے فرزند کلب سبطین نوری  سے فون پر وائرل دعوے کے حوالے سے بات چیت کی جائے۔ فون پر گفتگو کے داران انہوں نے بتایا کہ مولانا کی طبعیت خراب ہے لیکن وہ باحیات ہیں۔

Conclusion

نیوزچیکر کی تحقیقات سے پتا چلا کہ سوشل میڈیا پر شیعہ عالم دین مولانا کلب صادق کے انتقال کی فرضی خبر شیئر کی جارہی ہے۔

Result: False

Our Sources

AAg:https://dailyaag.com/phase2/maulana-kalbe-sadiq-admit-in-era-hospital-sarfaraz-ganj-lucknow/

Qaumiawaz:https://www.qaumiawaz.com/national/news-of-death-of-shia-cleric-maulana-kalbe-sadiq-is-fake

Direct Phone call Verification Son of kalbe Sadiq

نوٹ:کسی بھی مشتبہ خبرکی تحقیق،ترمیم یا دیگرتجاویز کے لئے ہمیں نیچے دئیے گئے واہٹس ایپ نمبر پر آپ اپنی رائے ارسال کر سکتےہیں۔

 9999499044

Mohammed Zakariya
Mohammed Zakariya
Zakariya has an experience of working for Magazines, Newspapers and News Portals. Before joining Newschecker, he was working with Network18’s Urdu channel. Zakariya completed his post-graduation in Mass Communication & Journalism from Lucknow University.
Mohammed Zakariya
Mohammed Zakariya
Zakariya has an experience of working for Magazines, Newspapers and News Portals. Before joining Newschecker, he was working with Network18’s Urdu channel. Zakariya completed his post-graduation in Mass Communication & Journalism from Lucknow University.

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Most Popular