Saturday, June 22, 2024
Saturday, June 22, 2024

HomeViralکشیرِ منز 500 لڑکین ہنزِ لاشِ ٹارچر سیلِ منز برآمد؟ زانیو اتھ...

کشیرِ منز 500 لڑکین ہنزِ لاشِ ٹارچر سیلِ منز برآمد؟ زانیو اتھ متعلق پوز

سوشل میڈیا صارِفو چُھ اکھ اخبار رپورٹ شیئر کئرمژِ یتھ منز دعویٰ چُھ آمتُ کرنہ زہِ کشیرِ منز آئہ 500 لڑکین ہنز لاش خفیہ ٹارچر سیلِ منز برآمد کرنہ تہ 200 خواتین آئیہ زندہ برآمد کرنہ۔

سماجی رابطہ ہنزِ سائٹ فیس بُکس پیٹھ چُھ سیٹھا صارفو اکھ اخبار رپورٹ شیئر کورمتُ تہ چُھکُ یہوے دعویٰ کورمتُ۔ اکِ فیس بُک صارِفن چُھ اخبار رپورٹ شیئر کرتھِ لیکوھمتُ ‘بھارتی کشیرِ منز آئہ 500 کورین ہنز لاش خفیہ ٹارچر سیلِ منز برآمد کرنہ تہ 200 خواتین آئیہ زندہ برآمد کرنہ’۔

فہس بُکس پیٹھ ہیکیو توہی اتھ متعلق باقی پوسٹن ہُند لنکِ یتیتھ، یتیتھ، یتیتھ تہ یتیتھ وچتھِ۔

Fact Check/ Verification

کشیرِ منز آئہ 500 لڑکین ہنز لاش خفیہ ٹارچر سیلِ منز برآمد کرنہ تہ 200 خواتین آئیہ زندہ برآمد کرنہ کسِ دعویٰ ہس متعلق تحقیقات خاطرء کور اسہِ ایمنسٹی انٹرنیشل این جی او وئب سائٹِ پیٹھ اتھ متعلق انگریزی یس منز کیورڈ سرچ تہ اسہِ آئیہ نہ کانہہ تہ رپورٹ اتھ متعلق لبنہ۔

کشیرِ منز آئہ 500 لڑکین ہنز لاش
Courtesy: Screengrab from Amnesty International

امہِ پتہ کئرِ اسہِ اردو الفاظ سان سرچ تہ یتھ کنِ تہ سرچ کرتھِ تہ آئیہ نہ کانہہ رپورٹ اتھ متعلق لبنہ زہِ کشیرِ منز آئہ 500 لڑکین ہنز لاش خفیہ ٹارچر سیلِ منز برآمد تہ 200 خواتین آئیہ زندہ برآمد کرنہ۔

گوگلس اتھ دعویٰ ہس متعلق سرچ کرنس دوران آئیہ اسہِ ایمنسٹی انٹرنیشنل طرفہ 2021-20 ہچ اکھ رپورٹ لبنہ، یتھ منز دنیا ہس منز تمام ممالکن ہندسِ بارس منز تفاصیل درج کرتھِ چھِ۔ صفحہ 182 پیٹھ چُھ بھارتس متعلق رپورٹ موجود، تاہم چُھنہ کُنِ تہِ جائہ رپورٹس منز یُتھ ذکر کرتھِ کینہہ۔

گوگلس پیٹھ سرچ دوران آئیہ اسہِ پاکستانِ اخبار نوائے وقت وئب سایٹِ 16 فروری 2021 منز شائع رپورٹ لبنہ۔ رپورٹس منز چُھ ذکر آمتُ کرنہ زہِ ایمنسٹی انٹرنیشنل طرفہ رپورٹ مطابق آئیہ کشیرِ منز آئہ 500 لڑکین ہنز لاش خفیہ ٹارچر سیلِ منز برآمد تہ 200 خواتین آئیہ زندہ برآمد کرنہ، تاہم چُھنہ کنہِ چائے رپورٹکُ ثبوت دینہ کینہہ۔ امہِ ستِ گو ظاہر زہِ رپورٹ چۃھنہ حقیقتس پیٹھ مبنی کینہہ۔

Courtesy: Screengrab from Nawi Waqt

گوگل سرچِ منز آؤ نہ اسہِ انگریزی تہ اردو الفاظ سان کُنہ جائہ اتھ متعلق رپورٹ لبنہ۔ ہرگاہ زہِ یُتھ کانہہ معاملہ آسہِ ہے تہ پاکستان کیو معروف میڈیا ادارؤ جیو نیوز، ڈان وغیرہ تہ امہِ علاؤ بین الاقوامی میڈیاہن آسہِ ہے اتھ متعلق ضورور ذکر کورمتُ۔

 500 لڑکیوں کے حفیہ ٹارچر سیل
Courtesy: Screengrab from google

اردو تحقیقات پرنہ خاطرء کریو یتھ پیٹھ کلک: کیا کشمیر میں خفیہ ٹارچر سیل سے 500 لڑکیاں برآمد ہوئیں؟ جانئے سچ

Conclusion

لہذا گؤ صاف زہِ یُس دعویٰ یوان چُھ کرنہ زہِ کشیرِ منز آئہ 500 لڑکین ہنز لاش خفیہ ٹارچر سیلِ منز برآمد تہ 200 خواتین آئیہ زندہ برآمد کرنہ چُھ غلط تہ بے بنیاد۔

Result: False

Our Sources

Report by Amnesty international
google search
Self Analysis


نوٹ: کسی بھی مشتبہ خبرکی تحقیق،ترمیم یا دیگرتجاویز کے لئے ہمیں نیچے دئیے گئے واہٹس ایپ نمبر پر آپ اپنی رائے ارسال کرسکتے ہیں۔ 9999499044

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Most Popular