Monday, June 24, 2024
Monday, June 24, 2024

HomeFact Checkلیہہ ہس منز چُھنہ یہ آزادی ہندسِ حقس منز احتجاج یوان کرنہ

لیہہ ہس منز چُھنہ یہ آزادی ہندسِ حقس منز احتجاج یوان کرنہ

بھارتچ حکومت طرفہ آو 2019 ہس منز جموں وکشمیرس حاصل خصوصی درجہ 370 ختم کرنہ۔ تہ ریاست آئیہ دون حصن منز تقسیم کرنہ، جموں و کشمیر یوٹی تہ لداخ۔ یہ فاصلہ کرنُک مقصد اوس جموں و کشمیرس مینز بھارتس خلاف رنجش تہ احتجاج ختم کرنِ۔ امہِ فاصلہ پتہ آئیہ نہ جموں و کشمیرس منز بھارتس خلاف احتجاج وچھنہ کینہہ۔

از کل چُھ احتجاجکُ اکھ ویڈیو سوشل میڈیاہس پیٹھ وائرل گژھان تہ سوشل میڈیا صارِفو طرفہ چُھ یوان دعویٰ کرنہ زہِ یہ چُھ بھارتس خلاف لداخ یو ٹی منز احتجاج تہ یِمہ لُکھ چھِ آزادی ہندسِ حقس منز احتجاج کران۔

ٹویٹر صارِفو طرفہ یہ ویڈیو شیئر کرنچ لنک ہیکیو توہیِ یتیتھ تہ یتیتھ وچتھِ۔

ریاست کا درجہ

Fact Check/ Verification

نیوز چیکرن کور اتھ سلسلس منز تحقیقات زہِ واقعی چھا لداخ یو ٹی منز بھارتس خلاف احتجاج آمتُ کرنہ۔ اسہِ کور یہ ویڈیو انوڈِ ٹول کہِ مدد ساتِ کیفریمن منز تقسیم تہ امہِ منز کئرِ کینہہ کیفیرم گوگل ریورس امیج سرچ۔ سرچ دوران آئیہ اسہِ این ڈی ٹی وی ویب سائٹ پیٹھ اکھ رپورٹ لبنہ یتھ سآتِ یہ ویڈیو تہِ آمتُ اوس شیئر کرنہ۔

Courtesy: Screengrab from NDTV

رپورٹ کرنہ پتھ تور اسہِ فکرء زہِ یہ رہورٹ چُھ آمتُ 2 نومبر 2022 ہس منز شائع کرنہ تہ رپورٹس منز چُھ آمتُ وننہ زہِ لداخ یو ٹی منز آؤ سیاسی تہ سماجی حلقو طرفہ اکھ ریلی ہُند انعقاد کرنہ تہ تمہِ آسہِ لداخ تہ لیہہ خاطرء الگ پارلیمانی سیٹِ ہنز مانگ کران ہ بییہ آسہِ ریاستک درجہ بحال کرنس پیٹھ احتجاج کران۔

اتھ متعلق ئیہ اسہِ باقی رپورٹ تہِ لبنہ، یمن منز یہ ویڈیو شیئر چُھ آمتُ کرنہ۔ رپورٹن منز چُھ آمتُ وننہ زہِ لداخ یو ٹی منز چھِ لُکھ احتجاج کران تہ ریاستکُ درجہ بحال کرنچِ مانگ کران۔

رپورٹن ہُند ہیکیو توہیِ یتیتھ تہ یتیتھ وچتھِ۔

لداخ یو ٹی
Courtesy: Screengrab from BaaghiTv

Conclusion

یتھ کنِ گو نیوز چیکر کسِ تحقیقاتس منز ثابتِ زہِ لداخ یو ٹی منز اوس نہ آزادی ہُند احتجاج یوان کرنہ کینہہ بلکہ آسہِ لُکھ ریاستکُ درجہ بحال کرنس متعلق احتجاج کران۔

Result: Partly False

Our Sources

Report by NDTV, Dated November 2, 2022
Report by Baaghi TV, Dated November 2, 2022
Report by Times Now Dated January 17, 2023


نوٹ: کسی بھی مشتبہ خبرکی تحقیق، ترمیم یا دیگر تجاویز کے لئے ہمیں نیچے دئیے گئے واہٹس ایپ نمبر پر آپ اپنی رائے ارسال کرسکتے ہیں۔ 9999499044

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Most Popular