ہفتہ, جون 15, 2024
ہفتہ, جون 15, 2024

ہومFact Checkپرانی ویڈیو کو حالیہ نیوزی لینڈ زلزلے کا بتاکر کیا جارہا ہے...

پرانی ویڈیو کو حالیہ نیوزی لینڈ زلزلے کا بتاکر کیا جارہا ہے شیئر

Authors

Zakariya has an experience of working for Magazines, Newspapers and News Portals. Before joining Newschecker, he was working with Network18’s Urdu channel. Zakariya completed his post-graduation in Mass Communication & Journalism from Lucknow University.

Claim

پندرہ جنوری کو نیوزی لینڈ میں 6.1 شدت سے زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے۔ جس کے بعد سوشل میڈیا پر مختلف تصاویر اور ویڈیوز کو نیوزی لینڈ زلزلے سے منسوب کرکے شیئر کیا جارہا ہے۔ اسی سلسلے میں ایک دکان کی ویڈیو وائرل ہورہی ہے، جس میں دکان کے اندر سےلوگ بھاگتے ہوئے نظر آرہے ہیں اور ریک میں رکھا سامان گرتا ہوا نظر آرہا ہے۔ ویڈیو کے کیپشن میں ایک ٹویٹر صارف نے لکھا ہے کہ “نیوزی لینڈ میں 6.1 کا زلزلہ”۔

حالیہ نیوزی لینڈ زلزلے کی نہیں یہ ویڈیو۔
Courtesy: Twitter @MTariqBilal_

Fact

نیوزی لینڈ زلزلے کا بتاکر شیئر کی گئی ویڈیو کے ایک فریم کو گوگل ریورس سرچ کیا۔ جہاں ہمیں انجینئر سیموئیل مونگی نام کے فیس بک پیج پر 22 اگست 2021 کو شیئر شدہ ہوبہو ویڈیو ملی۔ جس میں اس ویڈیو کو ہیتی میں آئے زلزلے کا بتایا گیا ہے۔

Courtesy: FB/ Eng Samuel Mwangi

اس کے علاوہ جب ہم نے یوٹیوب پر “ہیتی ارتھ کوئیک 6.1 اور 7،1 “کیوڑد سرچ کیا۔ جہاں ہمیں22/27 اگست 2021 کو ڈیزاسٹر کمپائلیشنز اور ویڈیوز دی ٹیرموٹوز نام کے یوٹیوب چینل پر اپلوڈ شدہ ہوبہو ویڈیو ملی۔ جس میں اس ویڈیو کو 14 اگست 2021 کو ہیتی میں 7.2 کی شدت سے آئے زلزلے کا بتایا گیا ہے۔ ہم نے اس سلسلے میں مزید کیورڈ سرچ کیے، لیکن اطمینان بخش نتائج نہیں ملے، جس میں واضح ہوسکے کی یہ ویڈیو ہیتی زلزلے کی ہے۔ البتہ مذکورہ معلومات سے پتہ چلا کہ ویڈیو پرانی ہے۔

Courtesy: YouTube/ Videos de terremotos

اس طرح ہماری تحقیقات سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ یہ ویڈیو حالیہ نیوزی لینڈ زلزلے کی نہیں ہے۔ بلکہ یہ ویڈیو انٹرنیٹ پر کم از کم دو سالوں سے موجود ہے۔

Result: False

Our Sources
Facebook post by Eng Samuel Mwangi on 22/08/2021

YouTube Videos uploaded by Videos de Terremotos and Disaster Compilations on 2021


نوٹ: کسی بھی مشتبہ خبرکی تحقیق، ترمیم یا دیگر تجاویز کے لئے ہمیں نیچے دئیے گئے واہٹس ایپ نمبر پر آپ اپنی رائے ارسال کرسکتے ہیں۔ 9999499044

Authors

Zakariya has an experience of working for Magazines, Newspapers and News Portals. Before joining Newschecker, he was working with Network18’s Urdu channel. Zakariya completed his post-graduation in Mass Communication & Journalism from Lucknow University.

Mohammed Zakariya
Mohammed Zakariya
Zakariya has an experience of working for Magazines, Newspapers and News Portals. Before joining Newschecker, he was working with Network18’s Urdu channel. Zakariya completed his post-graduation in Mass Communication & Journalism from Lucknow University.

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

Most Popular