ہفتہ, جون 22, 2024
ہفتہ, جون 22, 2024

ہومFact CheckWeekly Wrap:پانچ منٹ میں ہفتے کی چند اہم وائرل پوسٹ کے حوالے...

Weekly Wrap:پانچ منٹ میں ہفتے کی چند اہم وائرل پوسٹ کے حوالے سے پڑھیں ہماری تحقیقات

Authors

Zakariya has an experience of working for Magazines, Newspapers and News Portals. Before joining Newschecker, he was working with Network18’s Urdu channel. Zakariya completed his post-graduation in Mass Communication & Journalism from Lucknow University.

ہفتہ واری خبر (Weekly Wrap) میں آج کچھ ایسے وائرل دعوےکی حقائق کو سامنے رکھیں گے ۔جو اس ہفتے سوشل میڈیا پر کافی وائرل ہوا ہے۔درج ذیل میں یک بعد دیگرے اسٹوری کو ملاحظہ فرمائیں۔

کیا مسلم پروایپ کے مالک نے امریکا کو فروخت کیا یوزرس کا ڈیٹا؟

مسلم پرو ایپ کے حوالے سے سوشل میڈیا پر فرضی دعوے شیئر کئے جارہے ہیں۔تحقیقات سے پتاچلا کہ مسلم پرو ایپ کو بنانے والا فرانس کا نہیں بلکہ سنگاپور کا ہے۔ایپ کے مالک نے سر سے خارج کیا ہے کہ انہوں نے اپنے یوزرس کا ڈیٹافروخت نہیں کیا ہے۔

پوری خبر یہاں پڑھیں۔

کیاعامررشادی نے ہندو-مسلم کولےکر دیاقابل اعتراض بیان؟

علماء کونسل کے قومی صدر عامر رشادی کی تصویر کے ساتھ فرضی دعویٰ کیا گیا ہے۔جبکہ تحقیقات سے پتاچلا کہ وائرل دعویٰ بے بنیاد ہے۔انہوں نے کسی بھی طرح کا مذہبیی جذبات کو مجروح کرنے والا بیان نہیں دیا ہے۔

پورہ خبر یہاں پڑھیں۔

کیا مولانا کلب صادق دنیا ء فانی سے رخصت کرگئے ہیں؟

شیعہ عالم دین مولاناکلب صادق کے حوالے سے دعویٰ کیاجارہاہے کہ ان کا انتقال ہوچکا ہے۔حالانکہ ان کی طبعیت شدید خراب ہے۔لیکن ان کا انتقال نہیں ہوا ہے۔

یہاں پڑھیں پوری پڑتال۔

کیا آرجے ڈی لیڈر تیجسوی نے متاثرہ گل ناز کی حمایت میں نکالا کینڈل مارچ؟

آرجے ڈی لیڈر تیجسوی کی ایک تصویر خوب شیئر کیاجارہاتھا۔جس میں وہ لوگوں کے ساتھ کینڈل مارچ کرتے ہوئے نظرآرہے ہیں۔دعویٰ کیاجارہاہے کہ تیجسوی یادو گل ناز کی حمایت میں کینڈل مارچ کررہے ہیں۔جبکہ یہ دعویٰ فرضی ہے۔

پوری خبر یہاں پڑھیں۔

اکبر اویسی مودی کے ساتھ مل کر کانگریس کا صفایا کریں گے؟

اکبر اویسی نے بیان دیا ہے کہ پی ایم مودی کے ساتھ مل کر کانگریس کا ہندوستان سے خاتمہ کردیں گے۔جبکہ یہ بیان 4سال پرانہ ہے۔

پوری خبر یہاں پڑھیں۔

نوٹ:کسی بھی مشتبہ خبرکی تحقیق،ترمیم یا دیگرتجاویز کے لئے ہمیں نیچے دئیے گئے واہٹس ایپ نمبر پر آپ اپنی رائے ارسال کر سکتےہیں۔

 9999499044

Authors

Zakariya has an experience of working for Magazines, Newspapers and News Portals. Before joining Newschecker, he was working with Network18’s Urdu channel. Zakariya completed his post-graduation in Mass Communication & Journalism from Lucknow University.

Mohammed Zakariya
Mohammed Zakariya
Zakariya has an experience of working for Magazines, Newspapers and News Portals. Before joining Newschecker, he was working with Network18’s Urdu channel. Zakariya completed his post-graduation in Mass Communication & Journalism from Lucknow University.

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

Most Popular